Jadid Khabar

بی جے پی اقتدار میں بے بس بیٹیاں خودکشی کو مجبور:سنجے سنگھ

Thumb


لکھنؤ:20نومبر(یواین آئی) عام آدمی پارٹی(عاپ) لیڈر و اترپردیش کے انچارج سنجے سنگھ نے یوگی حکومت کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ عصمت دری اور قتل کی وارداتوں کو روکنے میں ناکام وزیر اعلی کی پہلی ترجیح لو جہاد قانون ہے ۔مسٹر سنگھ نے جمعہ کو جاری ایک بیان میں کہا کہ بیٹیوں کے ساتھ درندگی کے واقعات عام ہوگئے ہیں لیکن یہ اور ڈراونا ہوجاتا ہے جب چنمیا نند اور ہاتھرس واقعہ کے عصمت دری کے ملزمین کے حمایت میں حکومت کھڑی ہوجاتی ہے اور انصاف کی امید کھو چکی بیٹیاں موت کو گلے لگانے کو مجبور ہوتی ہیں۔مرادآباد کے واقعہ کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کتنی پریشان رہی ہوگی وہ 15سالہ بچی جس نے چھیڑ چھاڑ سے تنگ آگ کر اپنی جان دے دی۔ انہوں نے کہا کہ جب کانپور میں ایک بیٹی کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی جاتی ہے تب وہاں موجود پولیس اہلکار مبینہ طور سے تماشائی بنے دکھائی دیتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ محفوظ تو خود پولیس والے بھی نہیں ہیں۔کانپور میں ہی ایک خاتون کانسٹیبل کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی واردات کو انجام دیا جاتا ہے ۔ آزادی کے 73سالوں میں ایسی ناکارہ حکومت نہیں دیکھی جہاں اس طرح جرائم پیشہ افراد گھوم رہے ہوں۔

 

Ads