Jadid Khabar

پی این بی میں 11360 کروڑ روپے کا غلط ٹرانزیکشن،جانچ شروع

Thumb

ممبئی،14فروری(ایجنسی) حکومت پنجاب نیشنل بینک میں ایک بڑی ہیرا پھیری سامنے آئی ہے۔ پی این بی نے بتایا کہ بینک نے 1.771.1 ملین ڈالر کا غلط ٹرانزیکشن (11.360 کروڑ روپے) کا پتہ لگایا ہے۔ ممبئی کی ایک شاخ میں یہ غلط ٹرانزیکشن ہوا ہے۔بینک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ٹرانزیکشن کچھ مخصوص منتخب ہولڈرز کی رضامندی کے ساتھ فائدہ پہنچانے کے لئے ہوئے تھے۔ ساتھ ہی اس ٹرانزیکشن کی بنیاد پر دوسرے بینکوں نے ان گاہکوں کو بیرون ملک میں ایڈوانس میں رقم ٹرانسفر کئے ۔ حالانکہ بینک نے اس دھوکہ دھڑی میں ملوث لوگوںکے نام کا انکشاف نہیں کیا ہے لیکن یہ معاملہ تحقیقاتی ایجنسیوں کو بھیج دیا گیا ہے۔بینک نے کہا کہ وہ بعد میں اس بات کا جائزہ لیں گے کہ کیا ان ٹرانزیکشن سے اس کی کوئی بھی اس کے لئے کوئی ذمہ داری نہیں بنتی ہے۔اس خبر کے بعد پی این بی کے حصص میں6 فیصد سے زائد کی گراوٹ درج کی گئی ہے۔غور طلب رہے کہ پی این بی پہلے سے ہی اس طرح کے دھوکہ دھڑی کی تحقیقات کر رہی ہے۔ گزشتہ ہفتے، سی بی آئی نے کہا تھا کہ انہوں نے پی این بی کی شکایت پر ارب پتی جولر نیرو مودی کے خلاف تحقیقات شروع کردی ہے۔دراصل میں پی این بی نے جولر اور بعض دیگر لوگوںپر  4.4 کروڑ ڈالر کے دھوکہ دہی کی ایک رپورٹ درج کرائی تھی۔

Ads