Jadid Khabar

جسٹس سیکری نے آلوک ورما معاملے میں مودی کا ساتھ کیوں دیا

Thumb

لکھنؤ،12جنوری(ایجنسی)پی ایم مودی کی صدارت میں تین ارکان کی سلیکٹ کمیٹی کے ذریعہ2-1کے فیصلے سے آلوک ورما کوسی بی آئی ڈائریکٹر کے عہدے پر ہٹائے جانے کے بعدمعاملہ اور بھی گہراتا جارہا ہے۔ سپریم کورٹ کے سابق جج جسٹس کاٹجو نے ان وجوہات کو بتایا ہے، جس کی وجہ سے جسٹس سیکری کو ملک ارجن کھڑگے کی مخالفت کے بعد پی ایم مودی کے فیصلے کی حمایت کرنا پڑا۔آلوک ورما کو ہٹائے جانے کو لے کرسلیکٹ کمیٹی میں وزیر اعلیٰ نریندر مودی اور سینئر کانگریس لیڈرملکا ارجن کھڑگے اور سی جے آئی کے نمائندے کے طور پرجسٹس اے کے سیکری شامل تھے۔واضح رہے کہ آلو ک ورما نے اپنی نوکری سے استعفیٰ دے دیا۔ اور اس معاملے پر اب سیاست گرم ہے۔اس معاملے پرجسٹس کاٹجو نے 10جنوری کو ایک فیس بک پوسٹ لکھا۔’’آلوک ورما کو وزیراعظم،ملکا ارجن کھڑگے اور چیف جسٹس اے کے سیکری کی ایک ایک کمیٹی کی طرف سی بی آئی ڈائریکٹر کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے پی ایم مودی کی صدارت میں تین ارکان کی سلیکشن کمیٹی کی طرف سے 2-1 کے فیصلے سے آلوک ورما کو سی بی آئی ڈائریکٹر کے عہدے سے ہٹائے جانے کے بعد معاملہ اور بھی گہرے چل رہا ہے۔ سپریم کورٹ کے سابق جج جسٹس مارکنڈے کاٹجو نے ان وجوہات کو بتایا ہے، جس کی وجہ سے جسٹس سیکری کو ملک ارجن کھڑگے کی مخالفت کے بعد پی ایم مودی کے فیصلے کی حمایت کرنا پڑا۔ واضح رہے کہ آلوک ورما کو ہٹانے والی سلیکشن کمیٹی میں وزیر اعظم نریندر مودی اور سینئر کانگریسی لیڈر ملک ارجن کھڑگے اور سی جے آئی کے نمائندے کے طور جسٹس اے کے سیکری شامل تھے۔ واضح رہے کہ آلوک ورما نے اپنی ملازمت سے استعفیٰ دے دیا اور اس مسئلہ پر اب سیاست گرم ہے۔اس معاملے پر جسٹس کاٹجو نے 10 جنوری کو ایک فیس بک پوسٹ لکھا’آلوک ورما کو وزیر اعظم، ملک ارجن کھڑگے (اپوزیشن کی نمائندگی کرتے ہوئے) اور جسٹس اے کے سیکری (CJI کے نمائندے) کی ایک کمیٹی کی طرف سے سی بی آئی ڈائریکٹر کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔وزیر اعظم اور جسٹس سیکری نے اسے ہٹانے کا فیصلہ کیا، جبکہ کھڑگے نے اس کی مخالفت کی۔اس سلسلے میں مجھے رشتہ داروں اور دوستوں سے جسٹس سیکری کے بارے میں پوچھ تاچھ کے لئے کئی ٹیلی فون کالز آئے، کیونکہ ظاہر طور پر یہ ان کی رائے تھی جو فیصلہ کن تھی، اور یہی میں نے انہیں بتایا ۔میں جسٹس سیکری کو اچھی طرح سے جانتا ہوں کیونکہ میں دہلی ہائی کورٹ میں اس کے چیف جسٹس تھے اور میں ان کی صداقت کی ضمانت لے سکتاہوں۔ انہوں نے تب تک فیصلہ نہیں لیا ہوگا،جب تک انہیں آلو ک ورما کے خلاف ریکارڈ میں کچھ مضبوط حقائق نہیں ملے ہوںگے۔وہ حقائق ہیں مجھے پتہ نہیں۔لیکن میں جسٹس سیکری کو جانتا ہوں، اور ذاتی طور پر میں یہ کہہ سکتا ہوں کہ وہ کسی سے متاثر نہیں ہوسکتے۔ جو کچھ بھی ان کے بارے میںکہا جا رہا ہے وہ غلط اور غیر مناسب ہے۔

Ads