Jadid Khabar

کیگ کی رپورٹ پر ریاستی حکومت کو بنانی چاہئے کابینہ کمیٹی: دگ وجے

Thumb

بھوپال، 11 جنوری (یو این آئی) کانگریس کے جنرل سکریٹری دگ وجے سنگھ نے کنٹرولر اینڈ آڈیٹر جنرل (سی اے جی) کی رپورٹ میں مدھیہ پردیش میں 40 ہزار کروڑ روپے سے زیادہ کے نقصان کی خبریں سامنے آنے کے بعد کہا ہے کہ ریاستی حکومت کو وزیر خزانہ کی صدارت میں کابینہ کمیٹی تشکیل دیکر قصورواروں کے خلاف کارروائی کرنی چاہئے ۔مسٹر سنگھ نے آج اخبارات میں شائع سی اے جی (کیگ) کی رپورٹ سے متعلق خبریں ٹویٹ کی ہیں۔ انہی خبروں کے ساتھ انہوں نے کہا ہے کہ مدھیہ پردیش حکومت کو فوری طور پر وزیر خزانہ کی صدارت میں کابینہ کمیٹی بنا کر قصوروار افراد کے خلاف کارروائی کرنی چاہئے ۔اسمبلی میں پیش کی گئی کیگ کی رپورٹ میں کئی مالیاتی خامیاں سامنے آئی ہیں۔ رپورٹ کے مطابق حکومت کئی طرح کے ٹیکس وصول نہیں کر پائی، جس سے اسے خاصا نقصان ہوا ہے ۔دریں اثناء اسمبلی میں پیش کردہ کمپٹرولر اینڈ آڈیٹر جنرل (کیگ) کی رپورٹ پر مدھیہ پردیش کے وزیر اعلی کمل ناتھ نے کہا کہ اس رپورٹ نے ثابت کر دیا ہے کہ سابقہ حکومت میں کس طرح کاگٹھ جوڑ کام کر رہا تھا۔مسٹر کمل ناتھ نے کہا کہ رپورٹ میں جس طرح سے سابقہ بھارتیہ جنتا پارٹی حکومت کے دور کی مالی بے ضابطگیاں اور مالی انتظام کی کمزوریاں اجاگر ہوئی ہیں،اس سے کروڑوں روپے کے نقصان کی بات سامنے آئی ہے ۔ اس سے یہ بات کی وضح ہو رہی ہے کہ سابقہ حکومت میں کس ررح کا گٹھ جوڑ بدعنوانی کو انجام دے رہا تھا۔ سارے معاملات کی تحقیقات کے بعد قصورواروں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ کانگریسی شروع سے ہی کہتے آ رہے ہیں کہ سابقہ حکومت میں بدعنوانی کا بڑا کھیل کھیلا گیا ہے ۔ حکومت تمام معاملوں کی تفتیش کرائے گی۔ ایک پبلک کمیشن بنے گا، جسے سارے معاملے سونپے جائیں گے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ سرکاری خزانے کو نقصان پہنچانے والوں کو بخشا نہیں جائے گا۔

Ads