Jadid Khabar

یمن : الحدیدہ میں نئے ٹھکانے آزاد ، حوثیوں کا ایک اہم کمانڈر ہلاک

Thumb

صنعاء ،15مئی ( ایجنسی ) یمن کے صوبے الحدیدہ میں پیر کے روز سرکاری فوج نے عرب اتحاد کی مدد سے بڑی کامیابیاں حاصل کی ہیں۔ یہ پیش رفت ملک کے مغرب میں تزویراتی اہمیت کے حامل شہر الحدیدہ اور اس کی بندگاہ کو آزاد کرانے کے لیے شروع کیے جانے والے عسکری آپریشن کے چند گھنٹے بعد سامنے آئی۔یمنی فوج نے الحدیدہ صوبے کے جنوب ضلعے التحیتا میں نئے ٹھکانوں کو کنٹرول میں لے لیا ہے اور اس دوران الغویرق کے علاقے کو مکمل طور پر آزاد کرا لیا گیا۔ کارروائی میں عرب اتحاد کے اپاچی فوجی ہیلی کاپٹروں نے بھی شرکت کی۔اتوار کو الحیمہ کی عسکری بندرگاہ محفوظ بنانے کے بعد مغربی ساحل میں 30 مربع کلو میٹر سے زیادہ کا علاقہ کلیئر کرا لیا گیا۔دوسری جانب ایک فوجی ذریعے نے التحیتا ضلعے میں لڑائی کے دوران حوثیوں کے ایک اہم کمانڈر ابو خلیل کی اپنے درجنوں جنگجو ساتھیوں کے ہمراہ ہلاکت کا اعلان کیا ہے۔الغویرق کا علاقہ اور اس کے نواحی دیہات التحیتا ضلعے میں گزشتہ دو برس کے دوران قحط سالی سے سب سے زیادہ متاثرہ علاقے ہیں۔ادھر عرب اتحاد کی فورسز نے التحیتا ضلعے کے علاقے الفازہ میں حوثی ملیشیا کی کمان کا مرکز تباہ کر دیا۔ سْرخ گرج کے نام سے جاری اس آپریشن کے دوران 40 سے زیادہ حوثی باغی مارے گئے۔یمنی فوج نے عرب اتحاد کی سپورٹ سے مغربی ساحل کے محاذ پر متعدد تزویراتی ٹھکانوں اور اہم ضلعوں کو آزاد کرانے کے بعد محفوظ بنا لیا ہے۔ اب وہ حوثیوں کے آخری اہم ترین گڑھ الحدیدہ کی بندرگاہ کی جانب پیش قدمی کر رہی ہے۔

Ads